Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Shahryar's Photo'

شہریار

1936 - 2012 | علی گڑہ, انڈیا

ممتاز جدید شاعروں میں شامل، نغمہ نگار، فلم ’امراؤ جان‘ کے گیتوں کے لیے مشہور۔ بھارتیہ گیان پیٹھ ایوارڈ یافتہ۔

ممتاز جدید شاعروں میں شامل، نغمہ نگار، فلم ’امراؤ جان‘ کے گیتوں کے لیے مشہور۔ بھارتیہ گیان پیٹھ ایوارڈ یافتہ۔

شہریار

غزل 89

نظم 61

اشعار 105

شدید پیاس تھی پھر بھی چھوا نہ پانی کو

میں دیکھتا رہا دریا تری روانی کو

جہاں میں ہونے کو اے دوست یوں تو سب ہوگا

ترے لبوں پہ مرے لب ہوں ایسا کب ہوگا

جستجو جس کی تھی اس کو تو نہ پایا ہم نے

اس بہانے سے مگر دیکھ لی دنیا ہم نے

سیاہ رات نہیں لیتی نام ڈھلنے کا

یہی تو وقت ہے سورج ترے نکلنے کا

شکوہ کوئی دریا کی روانی سے نہیں ہے

رشتہ ہی مری پیاس کا پانی سے نہیں ہے

دوہا 1

ٹوٹی پھوٹی کشتیاں دریا میں گرداب

میرے مرنے کے لیے یہ لمحے نایاب

  • شیئر کیجیے
 

کتاب 116

تصویری شاعری 26

ویڈیو 11

This video is playing from YouTube

ویڈیو کا زمرہ
کلام شاعر بہ زبان شاعر
Shahryar reading his poetry

شہریار

زندگی جیسی توقع تھی نہیں کچھ کم ہے

شہریار

آڈیو 25

ایسے ہجر کے موسم کب کب آتے ہیں

دل میں رکھتا ہے نہ پلکوں پہ بٹھاتا ہے مجھ

آندھی کی زد میں شمع_تمنا جلائی جائے

Recitation

متعلقہ بلاگ

 

متعلقہ شعرا

"علی گڑہ" کے مزید شعرا

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے