aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Kanval Ziai's Photo'

کنول ضیائی

1927 - 2012

کنول ضیائی

غزل 8

اشعار 4

ہمارا دور اندھیروں کا دور ہے لیکن

ہمارے دور کی مٹھی میں آفتاب بھی ہے

ہمارا خون کا رشتہ ہے سرحدوں کا نہیں

ہمارے خون میں گنگا بھی چناب بھی ہے

  • شیئر کیجیے

چند سانسوں کے لئے بکتی نہیں خودداری

زندگی ہاتھ پہ رکھی ہے اٹھا کر لے جا

  • شیئر کیجیے

جس میں چھپا ہوا ہو وجود گناہ و کفر

اس معتبر لباس پہ تیزاب ڈال دو

  • شیئر کیجیے

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے