aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر
Karamat Ali Karamat's Photo'

کرامت علی کرامت

1936 | اڑیسہ, انڈیا

کرامت علی کرامت

غزل 16

نظم 2

 

اشعار 22

ہمیشہ آگ کے دریا میں عشق کیوں اترے

کبھی تو حسن کو غرق عذاب ہونا تھا

  • شیئر کیجیے

کوئی زمین ہے تو کوئی آسمان ہے

ہر شخص اپنی ذات میں اک داستان ہے

  • شیئر کیجیے

میں لفظ لفظ میں تجھ کو تلاش کرتا ہوں

سوال میں نہیں آتا نہ آ جواب میں آ

منزل پہ بھی پہنچ کے میسر نہیں سکوں

مجبور اس قدر ہیں شعور سفر سے ہم

  • شیئر کیجیے

غم فراق کو سینے سے لگ کے سونے دو

شب طویل کی ہوگی سحر کبھی نہ کبھی

  • شیئر کیجیے

کتاب 25

تصویری شاعری 2

 

"اڑیسہ" کے مزید شعرا

 

Recitation

Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

GET YOUR PASS
بولیے