Font by Mehr Nastaliq Web

aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

یوں بظاہر تو پس پشت نہ ڈالو گے ہمیں

ادریس آزاد

یوں بظاہر تو پس پشت نہ ڈالو گے ہمیں

ادریس آزاد

MORE BYادریس آزاد

    یوں بظاہر تو پس پشت نہ ڈالو گے ہمیں

    جانتے ہیں بڑی عزت سے نکالو گے ہمیں

    اپنا گھر بار ہے ابعاد مکانی سے بلند

    وقت کو ڈھونڈنے نکلو گے تو پا لو گے ہمیں

    اتنے ظالم نہ بنو کچھ تو مروت سیکھو

    تم پہ مرتے ہیں تو کیا مار ہی ڈالو گے ہمیں

    تم نہیں آئے نہیں آئے مگر سوچا تھا

    ہم اگر روٹھ بھی جائیں تو منا لو گے ہمیں

    ہم ترے سامنے آئیں گے نگینہ بن کر

    پہلے یہ وعدہ کرو پھر سے چرا لو گے ہمیں

    تم بھی تھے بزم میں یہ سوچ کے ہم نے پی لی

    ہم اگر مست ہوئے بھی تو سنبھالو گے ہمیں

    قابل رحم بنے پھرتے ہیں اس آس پہ ہم

    اپنے سینے سے کسی روز لگا لو گے ہمیں

    ہم بڑی قیمتی مٹی سے بنائے گئے ہیں

    خود کو ہم بیچنا چاہیں گے تو کیا لو گے ہمیں

    ہم بھی کچھ اپنی تمنائیں سنائیں گے تمہیں

    جب تم اپنی یہ تمنائیں سنا لو گے ہمیں

    تم سے ہم دور چلے آئے ہیں صدیوں کے قریب

    روشنی بن کے اگر آؤ تو آ لو گے ہمیں

    ہم نہ بھولیں گے تمہیں جتنی بھی کوشش کر لو

    بھولنے کے لیے ہر بار خیالو گے ہمیں

    ગુજરાતી ભાષા-સાહિત્યનો મંચ : રેખ્તા ગુજરાતી

    ગુજરાતી ભાષા-સાહિત્યનો મંચ : રેખ્તા ગુજરાતી

    મધ્યકાલથી લઈ સાંપ્રત સમય સુધીની ચૂંટેલી કવિતાનો ખજાનો હવે છે માત્ર એક ક્લિક પર. સાથે સાથે સાહિત્યિક વીડિયો અને શબ્દકોશની સગવડ પણ છે. સંતસાહિત્ય, ડાયસ્પોરા સાહિત્ય, પ્રતિબદ્ધ સાહિત્ય અને ગુજરાતના અનેક ઐતિહાસિક પુસ્તકાલયોના દુર્લભ પુસ્તકો પણ તમે રેખ્તા ગુજરાતી પર વાંચી શકશો

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے