aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

خاندانی رشتوں میں اکثر رقابت ہے بہت

بشیر بدر

خاندانی رشتوں میں اکثر رقابت ہے بہت

بشیر بدر

MORE BYبشیر بدر

    خاندانی رشتوں میں اکثر رقابت ہے بہت

    گھر سے نکلو تو یہ دنیا خوب صورت ہے بہت

    اپنے کالج میں بہت مغرور جو مشہور ہے

    دل مرا کہتا ہے اس لڑکی میں چاہت ہے بہت

    ان کے چہرے چاند تاروں کی طرح روشن رہے

    جن غریبوں کے یہاں حسن قناعت ہے بہت

    ہم سے ہو سکتی نہیں دنیا کی دنیا داریاں

    عشق کی دیوار کے سائے میں راحت ہے بہت

    دھوپ کی چادر مرے سورج سے کہنا بھیج دے

    غربتوں کا دور ہے جاڑوں کی شدت ہے بہت

    ان اندھیروں میں جہاں سہمی ہوئی تھی یہ زمیں

    رات سے تنہا لڑا جگنو میں ہمت ہے بہت

    مأخذ:

    Aasman (Pg. 22)

    • مصنف: Bashir Badar
      • اشاعت: 2011
      • ناشر: M.R. Publications
      • سن اشاعت: 2011

    موضوعات

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے