aaj ik aur baras biit gayā us ke baġhair

jis ke hote hue hote the zamāne mere

رد کریں ڈاؤن لوڈ شعر

لاکھ تقدیر پہ روئے کوئی رونے والا

صدا انبالوی

لاکھ تقدیر پہ روئے کوئی رونے والا

صدا انبالوی

MORE BYصدا انبالوی

    لاکھ تقدیر پہ روئے کوئی رونے والا

    صرف رونے سے تو کچھ بھی نہیں ہونے والا

    بار غم گل ہے کہ پتھر ہے یہ موقوف اس پر

    کس سلیقے سے اسے ڈھوتا ہے ڈھونے والا

    کوئی تدبیر یا تعویذ نہیں کام آتی

    حادثہ ہوتا ہے ہر حال میں ہونے والا

    ہاتھ میں طفل کے ہوش آتے ہی سیل فون آیا

    اب نہیں دکھتا محلے میں کھلونے والا

    تو ہے شاعر تجھے ہرگز نہ سہائے رونا

    تیرا ہر اشک ہے گیتوں میں پرونے والا

    کھول اٹھتا ہے لہو دیکھ کے اپنا یارو

    فصل کو کاٹے نہ جب فصل کو بونے والا

    موت کی گود میں جب تک نہیں تو سو جاتا

    تو صداؔ چین سے ہرگز نہیں سونے والا

    ویڈیو
    This video is playing from YouTube

    Videos
    This video is playing from YouTube

    نامعلوم

    نامعلوم

    Additional information available

    Click on the INTERESTING button to view additional information associated with this sher.

    OKAY

    About this sher

    Lorem ipsum dolor sit amet, consectetur adipiscing elit. Morbi volutpat porttitor tortor, varius dignissim.

    Close

    rare Unpublished content

    This ghazal contains ashaar not published in the public domain. These are marked by a red line on the left.

    OKAY

    Jashn-e-Rekhta | 8-9-10 December 2023 - Major Dhyan Chand National Stadium, Near India Gate - New Delhi

    GET YOUR PASS
    بولیے